×

وفاقی وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کا شاندار فیصلہ، آٹے کی چوری روکنے کے لیے ’ٹریکنگ ڈیوائس تھیلوں‘ کی تیاری شروع کر دی

اسلام آباد( نیوز ڈیسک ) وفاقی وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے گندم اور آٹے کی اسمگلنگ روکنے کیلئے جدید ٹیکنالوجی سے آراستہ تھیلوں کی تیاری شروع کردی ہے، فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ گندم ، آٹے کی اسمگلنگ اور ذخیرہ اندوزی روکنے کیلیے ٹریکنگ ڈیوائس سے لیس فوڈ گریڈ

میٹریل سے تیار تھیلے اور بوری تیار کرنے کیلیے کام شروع کردیا۔وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے نجی ٹی وی سے گفتگو میں بتایا کہ ملک بھر میں گندم اور آٹے کی اسمگلنگ اور ذخیرہ اندوزی روکنے کیلئے ہماری وزارت نے ایسی بوری اور تھیلے کی تیاری پر کام شروع کردیا جو کہ نہ صرف فوڈ گریڈ میٹریل سے تیار کی جائیگی بلکہ اس میں ایک مخصوص ٹریکنگ ڈیوائس بھی نصب ہوگی،تجربات مکمل ہونے کے بعد اس پیکنگ میٹریل اور تیار کردہ تھیلوں کے بارے میں وزیراعظم سے حتمی منظوری حاصل کی جائے گی جس کے بعد ملک بھر میں گندم اور آٹے کی پیکنگ کیلیے یہی تھیلے استعمال کرنا لازم قرار دیا جائیگا۔وفاقی وزارت سائنس کی جانب سے باضابطہ طور پر لازم قرار دیئے جانے اور عالمی ادارہ صحت کی جانب سے جاری گائیڈ لائنز کے باوجود ملک بھر میں غذائی اشیاء کی فوڈ گریڈ پیکنگ میٹریل میں فروخت شروع نہیں ہو سکی،پاکستان پولی پراپلین و ون سیک مینو فیکچرز ایسوسی ایشن نے وزیراعظم ، وزرائے اعلی اور اعلی عدلیہ کو لکھے خطوط میں انکشاف کیا کہ ملک بھر میں فلورملز نان فوڈ گریڈ بیگ میں آٹا پیک کر رہی ہیں بالخصوص ری سائیکل میٹریل سے تیار شدہ اور انسانی صحت کیلئے خطرناک ہے، PPWS کی درخواست پر چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ 25 اگست کو اس معاملے پر سماعت کریں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں