×

ایران اورافغانستان کی سرحدپرپاکستان کیاکرنے والاہےجان کرمقامی آبادی میں خوشی کی لہردوڑ گئی،کپتان کودعائیں

اسلام آباد(Pلیٹیسٹ نیوز پاکستان) وزیراعظم پاکستان کے دفتر نے کہاہے کہ پاکستان افغانستان اور ایران کے ساتھ سرحدی علاقوں میں کاروباری سرگرمیوں کو فروغ دینے اور شہریوں کی مدد کیلئے آئندہ سال فروری تک 3 بازار تعمیر کرے گا۔دفتر کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم پاکستان عمران خان

نے جمعرات کے روز اعلی سطح اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے ان بازاروں کی تعمیر کے ابتدائی منصوبے کی منظوری دی۔ابتدائی منصوبے کے تحت بلوچستان میں 2 جبکہ خیبرپختونخوا میں 1 بازار فروری2021 میں مکمل کرلئے جائیں گے اور یہاں سرگرمیاں شروع ہوجائیں گی۔بیان کے مطابق افغانستان کے ساتھ سرحد پر 12بازار جبکہ ایران کے ساتھ سرحد پر 6بازار تعمیر کرنے کی توقع ہے۔اس موقع پر وزیراعظم کے حوالے سے کہا گیا ہے کہ یہ بازار سرحدی علاقوں میں رہنے والے شہریوں کو بہتر کاروباری وتجارتی مواقع فراہم کریں گے۔بیان کے مطابق عمران خان نے کہا کہ سرحدوں پر باڑ لگانے سے سرحد کے آر پار آنے جانے کو منظم کرنے اور اسمگلنگ روکنے میں مدد ملے گی، انہوں نے متعلقہ محکموں کو ہدایات جاری کیں کہ سرحدی بازاروں اور سرکاری سرحدی گزرگاہوں پر تعینات ہونے والے عملے کی تربیت مکمل کی جائے۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ سرحد کے آر پار سمگلنگ روکنے کیلئے موثر اقدامات کئے جائیں گے جس کے باعث مقامی شہری بری طرح متاثر ہوتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں