×

اکیلی خاتون رات کو 12 بجے گھر سے کیوں نکلی، سفر پرجانے سے پہلے پیٹرول چیک کرنا چاہیے تھا،سی سی پی او لاہور عمر شیخ نے کیا بیان دیدیا ،جانیں 

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک ) سی سی پی او لاہور عمر شیخ کا موٹروے پر خاتون کے ساتھ زیادتی کے واقعے سے متعلق نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ خاتون ساڑھے 12 بجے ڈیفینس سے گجرانوالہ کے لیے نکلیں۔میں حیران ہوں کہ 3 بچوں کی والدہ اتنی رات کو اکیلے سفر پر نکل رہی ہیں۔اگر آپ ڈیفینس سے

نکلی ہیں تو پھر جہاں آبادی ہے وہاں چلی جاتی۔اگر آپ اس طرف سے نکلی ہیں تو کم از کم گاڑی کا پٹرول چیک کر لیتیں۔سی سی پی او نے مزید کہا کہ جیسے ہی خاتون نے ٹول پلازہ کراس کیا تو زرا آگے جا کے ان کی گاڑی میں پٹرول ختم ہو گیا۔رات کے بجے ان کی گاڑی سے پڑول ختم ہو گیا۔جس کے بعد یہ واردات ہوئی،اس کے بعد خاتون نے 15پر کال کرنے کی بجائے بھائی کو کال کی۔ہمارے پاس اطلاع رات کو 3 بج کر 5منٹ پر آئی۔ ایک شخص نے دیکھا کہ دو لوگ خاتون کو گاڑی سے زبردستی نکال رہے ہیں،ہماری ٹیم 25منٹ کے اندر پہنچی لیکن بدقسمتی سے تب تک یہ واقعہ رونما ہو چکا تھا۔ہم نے پوری طور پر فرانزک ٹیم کو بلایا۔ سی سی پی او عمرشیخ نے مزید کہا کہ جلد معاملے کی تہہ تک جائیں گے۔ 48 گھنٹوں میں ملزمان تک پہنچ جائیں گے۔14 افراد کو حراست میں لے لیا ہے۔انہوں نے کہا کہ جب ملزمان نے خاتون کی گاڑی کا شیشہ توڑا تو انہیں زخم آیا،وہاں سے بلڈ سیمپل بھی لے لیا گیا ہے۔ ۔ جب کہ وزیر اعظم کے معاون خصوصی شہباز گل نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئیٹر پر جاری ایک پیغام میں بتایا ہے کہ اجتماعی زیادتی کے واقعہ میں ملوث 12 کے قریب مشتبہ افراد کو دھر لیا گیا ہے۔ اپنے ٹوئیٹ میں انہوں نے بتایا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب کی ہدایت پر سی سی او پی لاہور تفتیشی ٹیم کی سربراہی کر رہے ہیں۔ شہباز گل کے مطابق تفتیش میں اربن اور رورل پولیسنگ کی تکنیک استعمال کی جا رہی ہے- معاون خصوصی نے بتایا کہ پولیس نے اب تک 12 کے قریب مشتبہ افراد کو گرفتار کر لیا ہے جبکہ کھوجی، سی سی ٹی وی فوٹیج اور ڈی این اے کی مدد سے تفتیش کا عمل جاری ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں