×

مہنگائی کے مارے عوام کیلئےبڑی خوشخبری۔۔ حکومت نے شاندار ریلیف دینے کا فیصلہ کرلیا۔۔ کیسےسستی چیزیں فراہم کی جائیں گی؟جانیے تفصیل

اسلام آباد: حکومت نے رمضان المبارک کے دوران عوام کو ریلیف کی فراہمی کے لئے اقدامات اٹھائے ہیں۔ سستی چینی یوٹیلیٹی اسٹورز پر مہیا کی جائے گی اور رمضان المبارک کے لئے 50،000 ٹن چینی درآمد کی جائے گی۔ تفصیلات کے مطابق ، تجارتی کارپوریشن نے 50 ہزار ٹن چینی کی درآمد کے لئے ٹینڈر جاری کیا ہے۔ ٹی سی پی نے بین الاقوامی فراہم کنندگان سے لفافے بولی 2 مارچ تک طلب کرلی ہے۔ بولی کے لفافے بھی 2 مارچ کو بولی دہندگان کی موجودگی میں کھولے جائیں گے۔ بتایا گیا کہ درآمد شدہ چینی کی پہلی کھیپ یوٹیلٹی اسٹوروں کو فراہم کی جائے گی۔ یوٹیلیٹی اسٹورز نے رمضان کی ضروریات کے لئے چینی درآمد کی درخواست کی تھی۔ یوٹیلیٹی اسٹوروں نے ابتدا میں حکومت سے 50،000 ٹن درآمد شدہ چینی کا مطالبہ کیا ہے۔ سرکاری سطح پر چینی کی درآمد پر ٹیکس میں چھوٹ دی گئی ہے۔ جولائی سے جنوری تک ، 278،482،000 ٹن چینی پہلے ہی درآمد کی جا چکی ہے۔ یعنی جولائی سے جنوری تک 20.59 ارب روپے مالیت کی چینی درآمد کی گئی۔ اسی طرح مردم شماری کے مطابق کراچی ، لاہور اور اسلام آباد سمیت ملک کے مختلف شہروں میں چینی کی قیمت ایک بار پھر 100 روپے فی کلو ہوگئی ہے۔ ایک ہفتے میں ، چینی کی قیمت لاہور میں 5 روپے اور کراچی میں 4 روپے ہوگئی ہے۔ کراچی ، لاہور ، اسلام آباد اور راولپنڈی کے شہری 100 روپے فی کلو چینی خریدنے پر مجبور ہیں۔ کوئٹہ ، گوجرانوالہ اور سیالکوٹ ، ملتان ، پشاور ، بہاولپور اور لاڑکانہ میں چینی کی قیمت 95 روپے فی کلو تک ہے جبکہ فیصل آباد میں چینی 94 روپے کلو اور بنوں میں 93 روپے فی کلو فروخت ہورہی ہے۔ سرگودھا ، حیدرآباد سکھر میں ، چینی 92 روپے فی کلو فروخت ہورہی ہے۔ خضدار میں چینی 90 روپے فی کلو فروخت ہورہی ہے۔ دوسری جانب عام مارکیٹ کے بعد یوٹیلیٹی اسٹورز اور چینی ، آٹے میں ضروری اشیا کی قیمتوں میں اضافے کی تیاریاں شروع کردی گئیں ہیں اور گھی کی قیمتوں میں اضافے کی سمری تیار کی گئی ہے۔ وزارت صنعت و پیداوار نے اقتصادی رابطہ کمیٹی کو بھی سمری ارسال کردی ہے۔ سمری کے مطابق ، یوٹیلیٹی اسٹورز پر چینی کی قیمت 7 روپے فی کلو اضافے کی تجویز ہے ، جس کے بعد چینی کی قیمت 68 روپے سے بڑھ کر 75 روپے فی کلو ہوجائے گی۔ ہاں ، گھی کی قیمت 175 روپے سے بڑھا کر 220 روپے فی کلو کرنے کی تجویز ہے۔ یوٹیلیٹی اسٹوروں پر دالوں اور چاول کی قیمتوں میں تبدیلی نہ کرنے کی تجویز پیش کی گئی ہے جبکہ وزارت صنعت و پیداوار نے چینی اور گھی کی قیمتوں سے متعلق ایک اور تجویز پیش کی ہے۔ جس کے تحت کہا گیا ہے کہ یوٹیلیٹی اسٹورز کی خریداری کی قیمت اور آپریشنل اخراجات میں 5 روپے 50 پیسے کی کمی کی جائے۔ فی کلو 35 جبکہ گھی کی قیمت 50 روپے مقرر کی گئی ہے۔ خریداری اور آپریشنل اخراجات سے 40 کلوگرام کم ہے۔ کے لئے بڑی خوشخبری … حکومت نے بہترین ریلیف فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ سستی اشیاء کیسے مہیا کریں؟ اورجانیے

اپنا تبصرہ بھیجیں