×

فحاشی پھیلانے اور بد کرداری کے الزام میں سزا پانے والی مسلمان ٹک ٹاکر آج کل کہاں اور کس حال میں ہے ؟جانیں 

فحاشی اور بدکاری کے الزام میں مجرم مسلمان ٹک ٹکر آج کہاں اور کس حالت میں ہے؟ قاہرہ (مانیٹرنگ ڈیسک) مصری خواتین کی دو معروف خواتین کو فحاشی پھیلانے اور عوامی اخلاقیات کی خلاف ورزی کرنے کے الزام میں بری کردیا گیا ہے۔ بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق ، مصر کی ایک عدالت نے دو نوجوان خواتین کو ٹک ٹاک پر ویڈیوز کے ذریعے معاشرے کی اقدار پر حملہ کرنے کے الزام میں بری کردیا ہے۔ ان خواتین کو “عوامی اخلاق کی خلاف ورزی کرنے” کے الزام میں پچھلے سال جولائی میں دو سال قید کی سزا سنائی گئی تھی۔ ینگ ٹِک ٹاکر حنین حسام پر الزام لگایا گیا تھا کہ انہوں نے اپنے 1.3 ملین صارفین میں سے خواتین کو پیسوں کے بدلے ویڈیو نشر کرنے کی ترغیب دی تھی ، جبکہ مودا پر غیر اخلاقی تصاویر اور ویڈیوز پوسٹ کرنے کا الزام عائد کیا گیا تھا۔ وہ عدالت میں بے ہوش ہوگئی۔ 9 ماہ سے جیل میں قید حنین شدید افسردگی کا شکار تھیں لیکن ان کی رہائی کے لئے ایک اور مقدمے کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ روایتی مصر میں ، خواتین کو مغربی طرز زندگی اپنانے کی اجازت نہیں ہے اور نوجوانوں پر زور دیا جاتا ہے کہ وہ سوشل اقدار کا استعمال کرتے ہوئے قومی اقدار کی پاسداری کریں ، یا دو سال قید کی سزا اور 300،000 مصری پاؤنڈ جرمانے کا سامنا کرنا پڑے گا۔ پچھلے سال جولائی میں مجھے 2 سال قید کی سزا سنائی گئی تھی۔ نوجوان ٹک لینے والا حنین حسام پر الزام لگایا گیا تھا کہ اس نے اپنے 1.3 ملین صارفین میں سے خواتین کو رقم کے بدلے ویڈیو نشر کرنے کی ترغیب دی تھی ، جبکہ مووڈا پر غیر اخلاقی تصاویر اور ویڈیوز شائع کرنے کا الزام عائد کیا گیا تھا۔ وہ عدالت میں بے ہوش ہوگئی۔ 9 ماہ سے جیل میں قید حنین شدید افسردگی کا شکار تھیں لیکن ان کی رہائی کے لئے ایک اور مقدمے کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ روایتی مصر میں خواتین کو مغربی طرز زندگی اپنانے کی اجازت نہیں ہے اور نوجوانوں پر زور دیا جاتا ہے کہ وہ سوشل میڈیا کا استعمال کرتے ہوئے قومی اقدار پر قائم رہیں ورنہ انہیں دو سال تک قید اور 300،000 مصری پاؤنڈ جرمانے کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ کردار کے الزام میں مجرم قرار دیئے جانے والے مسلمان ٹک ٹکر آج کہاں اور کس حالت میں ہے؟

اپنا تبصرہ بھیجیں