×

بند کریں اس کو ۔۔۔ ترکی نے واٹس ایپ اور فیس بک کے خلاف بڑا ایکشن لےلیا۔۔

اسلام آباد: مقبول ترین میسجنگ ایپ واٹس ایپ کی جانب سے رازداری کی پالیسی میں تبدیلی کے بعد پوری دنیا کے صارفین پریشان ہیں۔ اسی تناظر میں ، ترکی نے واٹس ایپ اور اس کی بنیادی کمپنی فیس بک کا آغاز کیا ہے۔ ڈیٹا شیئرنگ کے نئے قواعد معطل کردیئے گئے۔ ترکی نیوز ایجنسی کے مطابق ، ترک مسابقتی اتھارٹی نے فیس بک اور واٹس ایپ کے خلاف بھی تحقیقات کا آغاز کیا ہے۔ گذشتہ ہفتے واٹس ایپ نے اپنے رازداری کے قوانین میں تبدیلی کی تاکہ واٹس ایپ صارفین کو فیس بک اور واٹس ایپ کی معلومات تک رسائی حاصل ہوسکے۔ اسے دوسری کمپنیوں کے ساتھ بھی شیئر کیا جائے گا۔ صارفین جب تک نیا کردار قبول نہیں کرتے تب تک وہ واٹس ایپ کا استعمال نہیں کرسکیں گے۔ اب ترکی کے مسابقتی کمیشن کا کہنا ہے کہ اگر صارف نئے قواعد کو قبول کرتے ہیں تو ، ڈیٹا شیئرنگ کو معطل کردیا گیا ہے۔ اتھارٹی نے فیس بک سے بھی ڈیٹا شیئرنگ کو معطل کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ اس سے قبل ، واٹس ایپ کے ذریعہ ایک نئی رازداری کی پالیسی متعارف کرانے کے بعد ، ترک صدر رجب طیب اردوان کے میڈیا آفس نے واٹس ایپ کے استعمال کو کالعدم قرار دیا تھا۔ ترکی کا کہنا ہے کہ ڈیٹا پرائیویسی کے معاملے میں یوروپی یونین کے ممالک اور دوسرے ممالک کے درمیان امتیاز ناقابل قبول ہے۔ اس کے تحت اب واٹس ایپ صارف کی معلومات کو فیس بک اور اس کی دوسری کمپنیوں کے ساتھ شیئر کیا جائے گا۔ جب تک کہ وہ نئے کردار کو قبول نہیں کریں گے ، تب تک وہ واٹس ایپ استعمال نہیں کرسکیں گے۔ اب ترکی کے مسابقتی کمیشن کا کہنا ہے کہ اگر صارف نئے قوانین کو قبول کرتے ہیں تو بھی انہوں نے ڈیٹا شیئرنگ معطل کردی ہے۔ اتھارٹی نے فیس بک سے بھی ڈیٹا شیئرنگ کو معطل کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ اس سے قبل ، واٹس ایپ نے نئی رازداری کی پالیسی متعارف کرانے کے بعد ، ترک صدر رجب طیب اردوان کے میڈیا آفس نے واٹس ایپ کے استعمال کو کالعدم قرار دے دیا۔ ترکی کا کہنا ہے کہ ڈیٹا کی رازداری کے معاملے میں یوروپی یونین کے ممالک اور دوسرے ممالک کے درمیان امتیازی سلوک ناقابل قبول ہے۔ ترکی نے واٹس ایپ اور فیس بک کے خلاف بڑی کارروائی کی

اپنا تبصرہ بھیجیں