×

’’بے حسی کی انتہا ‘‘چھوڑیں جی، اس طرح کے معمولی واقعات ہوتے رہتے ہی، اسامہ ستی قتل کیس میں شیخ رشید کا ایسا بیان کہ پاکستانی ہی نہیں ، تحریک انصاف کے وزرا بھی آگ بگولا ہو ئے

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) اسلام آباد میں 2 جنوری کو ایک 22 سالہ شخص کو پولیس نے گولی مار کر ہلاک کردیا جس سے پوری قوم صدمے میں پڑ گئ۔ سینئر صحافی رؤف کلاسرا پیش کرتے ہوئے کہ اس معاملے پر وفاقی کابینہ میں بھی تبادلہ خیال کیا گیا ، وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز سے میڈیا پر جاکر یہ بتانے کو کہا گیا کہ حکومت اس واقعے پر کس قدر افسردہ ہے اور حکومت اسامہ ستی کا گھر تلاش کرنے کی کوشش کرے گی۔ لوگوں کو انصاف دلانے کے لئے ، کابینہ میں میڈیا کو ایسی بریفنگ دینے کا فیصلہ کیا گیا تاکہ لوگوں کو یہ محسوس نہ ہو کہ یہاں بے حس لوگ بیٹھے ہیں اور انہوں نے اس پر کارروائی نہیں کی۔ رؤف کلاسرا کے مطابق ، جب معاملہ وفاقی کابینہ میں ہے۔ جب بات چیت جاری تھی ، وزیر داخلہ شیخ رشید نے ایک بیان دیا جس نے سب کو حیران کردیا اور کابینہ ایک بار لرز اٹھی۔ انہوں نے کہا ، “چھوڑو ، ایسے معمولی واقعات یہاں پیش آتے ہیں۔” انہوں نے کہا کہ یہ الفاظ وزیر داخلہ کے ذریعہ ایک نوجوان کے قتل پر ہیں۔ یعنی ، پولیس نے ایک نوجوان کو ہلاک کیا اور اس کے بارے میں شیخ رشید کہتے ہیں کہ ٹچ ہر وقت اس طرح کی ہوتی ہے۔ کابینہ میں موجود ہر شخص شیخ رشید کی باتیں سن کر حیران رہ گیا۔ کیونکہ کسی کو توقع نہیں تھی کہ کسی وفاقی وزیر سے اس طرح کے اہم معاملے پر اس طرح کی رائے رکھی جائے گی۔ شیخ رشید سمجھتے ہیں کہ اس طرح کی معمولی ہلاکتیں ہوتی ہیں۔ اس پر وفاقی وزیر فواد چوہدری نے کہا کہ کوئی خدا سے ڈرنا چاہئے ، آپ کیسے کہہ سکتے ہیں کہ یہ معمولی واقعہ ہے۔ پورا امریکہ امریکہ میں صرف ایک غلام کو مارنے کی وجہ سے سڑکوں پر نکلا تھا اور آپ یہ کہہ رہے ہو کہ کسی بچے کو مارنا معمولی بات ہے۔ فواد چوہدری نے مزید کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ کی شکست کے پیچھے کالی نسل کا قتل بھی ہے۔ وفاقی وزیر فیصل واوڈا نے بھی شیخ رشید کے بیان پر برہمی کا اظہار کیا۔ ذرائع کے مطابق ، دوسرے وزرا اس معاملے پر خاموش رہے کیونکہ ان کا وزیر داخلہ کے ساتھ کوئی تعلق ہوسکتا ہے۔ اسامہ ستی قتل کیس میں شیخ رشید کا بیان کہ نہ صرف پاکستانی بلکہ پی ٹی آئی کے وزراء بھی آگ لگ چکے ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں