×

مفتی منیب کے جاتے ہی نئے چیئرمین رویت ہلال کمیٹی نے دبنگ اعلان کردیا

لاہور: مرکزی روٹ ہلال کمیٹی کے نئے چیئرمین اور بادشاہی مسجد کے خطیب مولانا عبد الخیر آزاد نے امید ظاہر کی ہے کہ عید اسی دن پورے ملک میں منائی جائے گی اور کہا ہے کہ وہ اس ضمن میں اپنی پوری کوشش کریں گے۔ یاد رہے کہ سابق چیئرمین مفتی منیب الرحمن گذشتہ دو دہائیوں سے اس عہدے پر فائز تھے۔ مولانا عبد الخیر آزاد کے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ وہ ملک میں تمام مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے افراد کو اکٹھا کرنے کی کوشش کریں گے۔ چلیں اور سینٹرل روٹ ہلال کمیٹی کے چیئرمین کی حیثیت سے اسے تبدیل کریں۔ یہ خیال کیا جاتا ہے کہ حکومت نے حال ہی میں مرکزی راستہ ہلال کمیٹی کے سابق چیئرمین مولانا مفتی منیب الرحمن کو ان کے عہدے سے ہٹادیا اور ان کی جگہ بادشاہی مسجد کے خطیب مولانا عبد الخیر کی جگہ لی۔ آزاد کو اس عہدے پر مقرر کیا گیا تھا۔ حکومت کی تشکیل کردہ نئی سنٹرل رویت ہلال کمیٹی میں بہت سارے نامور اسکالرز شامل ہیں۔ ان میں مفتی ضمیر ساجد ، صاحبزادہ حبیب اللہ چشتی ، قاری میر اللہ ، مفتی فضل جمیل رضوی ، حافظ عبد الغفور ، مفتی یوسف کشمیری ، سید علی قار نقوی ، مفتی فیصل احمد ، ڈاکٹر مفتی علی اصغر ، مفتی محمد اقبال چشتی ، ڈاکٹر یاسین ظفر شامل ہیں۔ مولانا فضل الرحیم ، علامہ محمد حسین اکبر اور ڈاکٹر راگھب حسین نعیمی۔ اس کے علاوہ کمیٹی میں وزارت سائنس و ٹکنالوجی ، وزارت مذہبی امور ، محکمہ موسمیات اور اسپارک کو بھی نمائندگی دی گئی ہے۔ جب وفاقی وزیر فواد چوہدری نے اپنی وزارت کا چارج سنبھالنے کے بعد عید کا چاند دیکھنے کے لئے ٹکنالوجی کی مدد لینے کا فیصلہ کیا تو مفتی منیب نے ان پر شدید تنقید کی۔ اعلان کیا

اپنا تبصرہ بھیجیں