×

پاکستانیوں کے 150ارب ڈالرز بیرونی اکائونٹس میں جمع ہیںاگر یہ دولت پاکستانی بینکوں میں آجائے تو ان لوگوں کا منافع کتنا بڑھ جائے گا؟دولت مندوں کےلئے شاندار موقع

پاکستانیوں کے پاس 150 ارب ڈالر غیر ملکی کھاتے میں جمع ہیں۔ اگر یہ دولت پاکستانی بینکوں کے پاس چلی جائے تو ان کے منافع میں کتنا اضافہ ہوگا؟ امیر اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) سابق چیئرمین ایف بی آر شبر زیدی نے انکشاف کیا ہے کہ 150 ارب ڈالر پاکستانی ڈالر غیر ملکی کھاتے میں جمع ہیں۔ تاہم ، شرح سود کم ہونے کی وجہ سے ، انہیں بہت معمولی منافع مل رہا ہے۔ اب وقت آگیا ہے کہ ان پاکستانیوں کو اپنا پیسہ وطن واپس لانے کے بارے میں سوچا جائے۔ وہ مثبت میڈیا مواصلات کی جانب سے ایک آن لائن ویبنار سے خطاب کر رہے تھے۔ معروف کاروباری شخص سے اپنی ملاقات کا ذکر کرتے ہوئے شبر زیدی نے کہا کہ پاکستانی ڈالر مالٹا جیسے ممالک کے بینکوں میں جمع تھے۔ اب وقت آگیا ہے کہ وہ ان سے پیسے واپس پاکستان لائیں۔ انہوں نے کہا کہ مذکورہ 150 ارب ڈالر کے مالک پاکستانیوں کے نام اور پتے معلوم ہیں۔ ایسے کاروباری افراد کو صرف 2٪ منافع مل رہا ہے۔ بیرونی کھاتوں میں پاکستانیوں کے پاس 150 ارب ڈالر جمع ہیں۔ اگر یہ دولت پاکستانی بینکوں کے پاس چلی جائے تو ان کا منافع اس میں کتنا اضافہ ہوگا؟ امیروں کے لئے بہت اچھا موقع

اپنا تبصرہ بھیجیں