×

خوف کے بد ترین سائے ،پورے پاکستان میں کیا کام ہونے والا ہے ؟ نیا تھریٹ الرٹ جاری

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) خوف کا بدترین سایہ ، پورے پاکستان میں کیا ہونے والا ہے؟ خطرے کا نیا انتباہ جاری کیا گیا … کورونا وائرس کی عالمی وبا نے بچوں میں نمونیا اور ہیضے کے پھیلاؤ کی وجہ سے ، ایک نیا کورونا خطرہ جاری کردیا گیا ہے ، اور سرکاری محکموں نے اس بیماری سے بچنے کے لئے سفارشات کی ہیں۔ تفصیلات کے مطابق ماہرین صحت نے متنبہ کیا ہے کہ عالمی مہاماری کورونا وائرس کی وجہ سے چھوٹے بچوں میں ہیضہ اور نمونیا پھیلنے کا خدشہ ہے۔ ہیضہ اور نمونیا سے بچاؤ کے اقدامات کا جائزہ لینے کے لئے ماہانہ بنیادوں پر ہدایات بنائیں ، بیماریوں سے بچاؤ کے لئے سفارشات بنائیں۔ بتایا گیا کہ 30 جنوری تک پنجاب کے تمام اسپتالوں میں صابن اور ہاتھ دھونے کی سہولیات فراہم کرنے کی ہدایت کی گئی ہے ، جبکہ محکمہ صحت پنجاب کو بھی 30 مارچ تک صوبے کے تمام طبی مراکز پر طریقہ کار کو فعال بنانے کی ہدایت کی گئی ہے ، 2021. گیا۔ دوسری طرف ، پاکستان میں کورونا وائرس کی دوسری لہر میں شدت آگئی جہاں عالمی وبا کی وجہ سے صرف ایک ہی دن میں 111 افراد لقمہ اجل بن گئے ، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 2،256 افراد میں کورونا وائرس ہونے کی تصدیق ہوگئی۔ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشنز سنٹر (این سی او سی) کے جاری کردہ تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق ، ملک میں کورونا وائرس سے اموات کی کل تعداد 9،668 ہوگئی ہے۔ پاکستان میں سب سے زیادہ ہلاکتیں صوبہ پنجاب میں ہوئی ہیں جہاں 3،783 افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں ، صوبہ سندھ میں یہ تعداد 3،419 بتائی گئی ہے جبکہ صوبہ خیبر پختونخوا میں 1،577 اموات سے کورونا وائرس سے ہلاکتوں کی تعداد 181 ہے بلوچستان اور آزاد کشمیر میں 211۔ شیئرنگ کیئرنگ ہے!

اپنا تبصرہ بھیجیں