×

انسانی سوچ بھی غیرمحفوظ۔۔فیس بک اپنے صارف کی سوچ اور دماغ کو پڑھے گا۔۔۔۔۔ٹیکنالوجی کی دنیا میں نیا تہلکہ مچ گیا۔سالانہ میٹنگ میں اہم اعلان

واشنگٹن (Pلیٹیسٹ نیوز پاکستان) فیس بک ایک ایسا سینسر بنانے کا ارادہ کر رہا ہے جو لوگوں کے خیالات کا پتہ لگائے اور انھیں عملی شکل دے سکے۔ سالانہ اجلاس میں بتایا گیا کہ کلائی پر سوار سینسر دماغ سے آنے والے عصبی اشاروں کو پڑھتا ہے۔ اس ٹول سے تحریری ، ویڈیو گیم کنٹرول اور دیگر سرگرمیوں میں مدد ملے گی۔ فیس بک ایک ایسا ٹول تیار کر رہا ہے جو مصنوعی ذہانت کی مدد سے خبروں اور مضمون کے خلاصے لکھ سکتا ہے ، تاکہ صارفین کو پورا متن نہ پڑھیں۔ بی ٹول قارئین کو مضامین پڑھنے اور سوالات کرنے کی بھی اجازت دے گا۔ رپورٹ کے مطابق ، فیس بک اپنے ڈیٹا سنٹر میں ایسے ڈیوائسز بھی لگائے گا جو رفتار میں 30 فیصد اضافہ کرے گا۔ 2021 کے منصوبوں کے مطابق ، فیس بک ایک ورچوئل سوشل میڈیا ہوگا۔ پلیٹ فارم پر کام کرنے کا ارادہ بھی رکھتا ہے۔ اس پلیٹ فارم پر ، ورچوئل اسسٹنٹ کسی بھی زبان کو دوسری زبان میں ترجمہ کر سکے گا۔ اس پروجیکٹ کو ہورائزن کا نام دیا گیا ہے۔ انسانی سوچ بھی غیر محفوظ ہے۔ فیس بک اپنے صارفین کے خیالات اور ذہن کو پڑھے گا۔ ٹیکنالوجی کی دنیا میں ایک نیا جھٹکا آیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں